فلم ’پدماوت‘ کے حق میں سپریم کورٹ نے سنایا دوبارہ فیصلہ، کہا رلیز پر نہیں ہوگی کوئی پابندی

نئی دہلی: ’پدماوت‘ فلم میکرس کی عرضی داخل کرنے کے بعد سپریم کورٹ نے فیصلہ سنایا تھا کہ فلم تمام ریاستوں میں رلیز ہوگی۔ لیکن کرنی سینا نے اس فیصلے کو دوبارہ کورٹ میں چیلنج کیا تھا جس کے بعد سپریم کورٹ نے ایک بار پھر فلم ’پدماوت‘ کے حق میں فیصلہ سنایا ہے۔ سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ فلم پر کسی طرح کی کوئی پابندی نہیں ہوگی اور نہ ہی کوئی فلم پر پابندی لگا سکتا ہے۔

چیف جسٹس کی ایک بینچ دیپک مشرا، جسٹس اے ایم کھانولکر اور جسٹس ڈی وائی چندراچد نے کہا ہے کہ ’’لوگوں کا یہ سمجھنا ضروری ہے کہ سپریم کورٹ نے ایک حکم جاری کردیا ہے اور اب اس پر عمل کرنا ہوگا‘‘۔

واضح ہو کہ راجستھان اور مدھیہ پردیش کی حکومت نے یہ کہتے ہوئے کہ اگر فلم رلیز ہوگی تو لا اینڈ آرڈر متاثر ہو سکتا ہے اور تناؤ جیسی صورت حال پیدا ہو سکتی ہے، فلم ’پدماوت‘ کی رلیز کو روکنے کی کوشش کی تھی۔

دیپک مشرا نے یہ بھی کہا کہ ’’ہم نے حکم جاری کردیا ہے اور ہمارے حکم کی تعمیل کرنا ہر کسی کے لیے لازمی ہے۔ چند لوگوں کا سڑکوں پر اترجانا  اور لا اینڈ آرڈر کی صورت حال پیدا کرکے فلم کی رلیز پر بین کی مانگ کرنا ناقابل قبول ہے۔

بینچ نے مزید کہا کہ آپ صلاح دے سکتے ہین کہ اگر ان کو فلم اتنی ہی ناپسند ہے تو نہ دیکھیں۔ ہم اپنے حکم کو تبدیل نہیں کرسکتے۔

حالاں کہ کرنی سینا نے فلم کے ڈائیریکٹر بھنسالی کی درخواست کو منظور کرلیا ہے اور رلیز سے پہلے فلم دیکھنے کے لیے راضی ہوگئی ہے۔

 

انٹرٹینمنٹ اور سنیما جگت کی مزید خبروں کی اپ ڈیٹس کے لئے لئےہمارا  FACEBOOK  اور   TWITTER  پیج لائیک کریں۔

ہماری ویب سائٹ cinekainaat.com پر خبریں پڑھنے کے لئے کلک کریں۔

Share

Check Also

رنبیر کپور کو ’سنجو‘ فلم میں نیوڈ سین کرنے پر نہیں ہوئی جھجھک، کہی یہ چونکا دینے والی بات

’سنجو‘ فلم کا ٹریلر رلیز ہونے کے بعد سے رنبیر کپور کی اداکاری کی کافی …