’مجھے جو اچھا لگتا ہے پاپا وہ نہیں کرنے دیتے‘ معصوم بچی کے دل کی آواز، دیکھیں شارٹ فلم ’لو لیبر لوسٹ‘

لو لیبر لوسٹ (پیار،مشقت، محرومی) نام کی یہ شارٹ فلم ایک باپ اور بیٹی کے جذبات، خواب، آرزو، امید، احساسات، مستقبل، رشتے کی اہمیت، خواہش کی تکمیل اور ان جانی شفقت کی جھلک پیش کرتی ہوئی ایک بہترین کہانی ہے۔

’’ہر بار ایسا ہی ہوتا ہے، مجھے جو جو اچھا لگتا ہے، پاپا مجھے کرنے ہی نہیں دیتے، اس لیے میں یہ کام پاپا سے چھپ چھپ کے کرتی ہوں‘‘ یہ کوئی ڈائلاگ نہیں بلکہ ایک معصوم سی بچی کی بے پناہ آرزوؤں کے قتل کی داستان ہے۔

فلم میں ایک چھوٹی سی بچی جس کو ذہنی طور پر نہایت ذہین دکھا یا گیا ہے، اس کی ذہانت ثابت کرنے کے لے بچی کے منہ سے نکلے ہوئے جملے ہی کافی ہیں مگر اس کے علاوہ بھی کچھ ایسی باتیں ہیں جو اس بچی کی ذہانت ثابت کر رہے ہیں۔

بچی کے ایک ہاتھ میں بار بار چوٹ پڑنے کی وجہ سے وہ دوسرے ہاتھ سے چھوٹی چھوٹی چیزیں بناتی ہے، کبھی کچھ لکھتی ہے، کبھی اپنی مونچھیں بناتی ہے۔

مگر اپنے فن کا اظہار کرتے وقت ہر بار اس کو اپنے باپ کے آنے کا ایک دھڑکا لگا رہتا ہے۔ فلم کے ذریعے سماج میں پھیلی ہوئی برائی یعنی بیٹی کے جذبات کی قدر نہ کرنے کی ذہنیت کو طشت از بام کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔

فلم کا اختتام نہایت درد ناک ہے، کہیں ایسا نہ ہو کہ آپ بھی اپنی بیٹی کے جذبات کو کچل ڈالیں اور بعد میں کف افسوس ملنے کے سوا کوئی چارہ نہ ہو ایک بار یہ شارٹ فلم لو لیبر لوسٹ ضرور دیکھیں۔۔۔۔۔۔۔

 

انٹرٹینمنٹ اور سنیما جگت کی مزید خبروں کی اپ ڈیٹس کے لئے لئےہمارا  FACEBOOK  اور   TWITTER  پیج لائیک کریں۔

ہماری ویب سائٹ cinekainaat.com پر خبریں پڑھنے کے لئے کلک کریں۔

Share

Check Also

ریویو: جب دو ملکوں میں جل رہی تھی نفرت کی آگ، ان دو جسموں میں سلگ رہی تھی محبت، دیکھیں یہ شارٹ فلم

ہندوستان کی آزادی کے فورا بعد وطن کے دو ٹکڑوں میں تقسیم ہونے جانے کا …